لاہور ( نصیر سلیم سے ) یہ انتہائی افسوسناک امر ہے کہ حکومت کورونا سے بچائو کیلیے بزرگ افراد کو مفت ویکسین لگا رہی ہے اس کے باوجود عوام کی طرف سے ھوصلہ افزا رد عمل سامنے نہیں آ رہا اآخر کیوں ؟ پاکستان اسلامک میڈیکل ایسوسی ایشن سے تعلق رکھنے والے ڈاکٹرز کا کہنا ہے کہ ملک میں یومیہ پانچ ہزار سے زائد کورونا کے کیسز رپورٹ ہورہے ہیں، حکومت مفت ویکسین لگارہی ہے اس کے باوجود لوگ

نہیں لگوارہے۔کراچی میں پریس کانفرنس کے دوران ڈاکٹر عبداللّٰہ متقی نے کہا جب تک 70 فیصد آبادی کو ویکسین نہیں لگتی وبا سے چھٹکارا ممکن نہیں۔پیما کے ذمہ داران نے کہا کہ کورونا وائرس بڑے پیمانے پر لوگوں کو متاثر کررہا ہے، ملک میں ویکسین کی مہم انتہائی سست روی کا شکار ہے۔ ڈاکٹر سہیل اختر نے کہا کہ عوام احتیاطی تدابیر کو اختیار کرنے میں بھی سنجیدہ نہیں ہیں، تیزی سے کراچی میں حالات خراب ہورہے ہیں۔ڈاکٹر کاشف نے کہا کہ حکومت کی جانب سے ویکسین کی خریداری میں کوتاہی نظر آئی ہے، آبادی کے لحاظ سے ویکسینیشن سینٹرز بنائے جائیں۔پیما کا کہنا ہے کہ تعلیمی اداروں کو مکمل ایس او پیز کے ساتھ دوبارہ کھولنا چاہئے، یہاں نسبتاً بہتر انداز سے ایس او پیز پر عمل ہوسکتا ہے، ہنگامی بنیادوں پر اساتذہ کرام کو بھی ویکسین لگانی چاہئے۔