لاہور ( مانیٹرنگ ڈیسک )پاکستان کرکٹ ٹیم کے سابق فاسٹ بولر عاقب جاوید نے مصباح الحق کو ایک کٹھ پتلی کوچ اور سلیکٹر جبکہ کپتان سرفراز احمد کو ایک پیادہ قرار دے دیا۔ چند روز قبل عاقب جاوید نے مصباح الحق کے دوہرے عہدوں پر تنقید کرتے ہوئے کہا تھا کہ انہیں ایک ہی وقت میں کوچ اور چیف سلیکٹر کا عہدہ دینا ٹھیک فیصلہ نہیں ہے۔تاہم اب انہوں نے مصباح الحق پر ایک

مرتبہ پھر تنقید کے تیر برساتے ہوئے کہا کہ ایسا محسوس ہورہا ہے کہ مصباح الحق کی ڈور کوئی اور ہلا رہا ہے۔ کوئی اور موجود ہے جو مصباح الحق کو ہدایات دے رہا ہے۔اپنی بات کی وضاحت کرتے

ہوئے عاقب جاوید کا کہنا تھا کہ مصباح الحق جس طرح کی ذہنیت کے حامل ہیں اسے دیکھ کر یہ نہیں لگتا کہ عمر اکمل اور احمد شہزاد کو کھلانے کا فیصلہ ان کا ہو سکتا ہے۔
عاقب جاوید نے قومی ٹیم کے کپتان سرفراز احمد کو اس سے بھی زیادہ کڑی تنقید کا نشانہ بنایا اور کہا کہ وہ ایک کپتان نہیں بلکہ ایک پیادہ ہیں۔ اگر سرفراز احمد حقیقی طور پر ایک کپتان ہوتے تو وہ کبھی بھی عمر اکمل اور احمد شہزاد کو ٹیم میں قبول نہیں کرتےانہوں عمران خان کی مثال دیتے ہوئے کہا کہ عمران خان یک طرفہ فیصلہ لینے کے عادی تھے لیکن وہ مثبت سوچ کے مالک تھے. عمران خان نئے کھلاڑیوں کو لاتے تھے اور ان کے لیے لڑتے تھے لیکن ان کھلاڑیوں پر کام نہیں کرتے تھے جو متعدد مرتبہ آزمائے جانے کے باوجود ناکامی سے دوچار ہوگئے ہوں۔ اگر ہم یہ روایت (ٹیم میں ناکامی کھلاڑیوں کی واپسی) جاری رکھیں گے تو کبھی کامیاب نہیں ہوپائیں گے۔