22

میرے خلاف امریکہ، بھارت اور اسرائیل نے سازش کی”امپورٹڈ حکومت نامنظور”سارے پاکستان کی آواز ہے

Spread the love

اپر دیر ( وی او پی نیوز ) تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے سربراہ اور سابق وزیراعظم عمران خان نے اپر دیر جلسے میں ایک نیا انکشاف کر ڈالا . اس نئے انکشاف سے ملک میں ایک بار پھر بحث و مباحثے شروع ہو جائیں گے ….وہ کیوں …؟ وہ اس لئے کہ نئے انکشاف کے مطابق “کپتان ” کیخلاف سازش میں کوئی ایک ملک نہیں بلکہ 3 ملک شامل تھے اور کپتان نے ان تینوں ملکوں کے نام عوامی جلسے میں بتا دئیے . سابق وزیر اعظم کے دعویٰ کے مطابق ” میرے خلاف امریکا، بھارت اور اسرائیل نے سازش کی۔امپورٹڈ حکومت نامنظور، سارے پاکستان کی آواز ہے۔ چاہتا ہوں، نوجوان اپنے حق کےلیے کھڑے ہوں، کبھی کسی کے سامنے نہیں جھکنا یہ شرک ہے۔ امپورٹڈ حکومت کی ساری دولت ملک سے باہر پڑی ہے، عمران خان کا جینا مرنا پاکستان میں ہے۔ آئی ایم ایف نے ہم پر بھی

پیٹرول، ڈیزل اور بجلی کی قیمت بڑھانے کے لیے دباؤ ڈالا، ہم نے اپنا پیٹ کاٹ کر عوام کو مہنگائی سے بچایا۔ امپورٹڈ حکومت نے رات کے اندھیرے میں 45 فیصد گیس کی قیمت بڑھا دی۔ہم ملک کی دولت اور آمدنی میں اضافہ کرنے کی کوشش کررہے تھے، ہم نے اپنے دور میں پاکستان کی تاریخ میں سب سے زیادہ ٹیکس اکٹھا کیا۔ شہباز شریف کو اس لیے لے کر آئے جو حکم آقا کریں گے یہ مانے گا، پہلا حکم جو آئی ایم ایف سے لیا ملک میں مہنگائی کی، اس حکومت نے پیٹرول کی قیمت 60 روپے بڑھا دی۔ جب پیٹرول اور ڈیزل کی قیمتیں بڑھتی ہیں تو ساری چیزیں مہنگی ہوجاتی ہیں، جس میں ذرا سی انسانیت ہوگی وہ اتنی مہنگائی کبھی نہیں کرے گا۔ آئی ایم ایف نے ہم پر پیٹرول اور ڈیزل کی قیمتیں بڑھانے کے لیے دباؤ ڈالا، ہم نے پیٹرول، ڈیزل کی قیمتیں بڑھانے کے بجائے 10 روپے کم کیں۔ ہم نے اپنے دور میں پاکستان کی تاریخ میں سب سے زیادہ پیسا اکٹھا کیا اورعوام کو پیٹرول اور ڈیزل پر سبسڈی دی۔ ہم جب آئے تو پاکستانیوں کی اوسط آمدنی 16 ہزار 180 تھی، ساڑھے 3 برسوں میں پاکستانیوں کی اوسط آمدنی 26 ہزار 380 پر گئی۔ہماری حکومت اس لیے گرائی گئی کہ امریکا کے پتلے اوپر بیٹھیں، ہم صحت کارڈ لائے، سود کے بغیر قرضے فراہم کیے، ہماری حکومت مہنگائی کے تحت نہیں ایک سازش کے تحت گرائی گئی۔ نواز شریف، آصف زرداری کے چوری کے پیسے ملک سے باہر پڑے ہیں، 30دن میں جتنی قیمتیں بڑھیں ہمارے ساڑھے 3برسوں میں اتنی نہیں بڑھیں۔ شہباز شریف کہہ رہے ہیں کہ مشکل حالات ہیں تو سازش نہ کرتے، میں پوچھتا ہوں، اگر آپ سے حکومت نہیں ہورہی تو یہ سازش کی کیوں؟ آج ہماری معیشت وہاں جارہی ہے جہاں ملک کو خطرہ ہے، انٹرنیشنل ادارے کہہ رہے ہیں کہ پاکستان کی معیشت گر رہی ہے، موڈیز نے پاکستان کی کریڈٹ ریٹنگ منفی کردی۔ ہم حکومت میں آئے تو بجلی کے شعبے میں سب سے بڑا گردشی قرضہ تھا، ہم نے ملک کو مشکل سے نکالا، جب سے شہباز شریف آئے ہیں ملک تیزی سے نیچے جارہا ہے۔ محمود خان سے اپیل کرتا ہوں، دیر کے لوگوں کے لیے بڑا سٹیڈیم بنائیں، پاکستان کے بڑے شہروں میں 2 یا 3 سٹیڈیم بنائے جائیں۔ جلسے میں ساڑھے4 بجے آنا تھا،اڑھائی بجے ہی گراؤنڈ بھر گیا، چاہتا ہوں کہ نوجوان قوم کے لیے کھڑے ہوں اور کبھی غلامی قبول نہ کریں۔”

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں